گوگل کے پہلے فولڈ ایبل فون کی اولین جھلک سامنے آگئی

گوگل نے اپنے پہلے فولڈ ایبل اسمارٹ فون کی اولین جھلک جاری کر دی ہے۔
ٹوئٹر اور یوٹیوب پر پوسٹ ویڈیو میں گوگل کی جانب سے پہلے فولڈ ایبل پکسل فون کے ڈیزائن کو دکھایا گیا۔
یہ فون کھل کر کسی ٹیبلیٹ جیسی شکل اختیار کر لیتا ہے۔
گوگل پکسل فولڈ کو 10 مئی کو کمپنی کی سالانہ ڈویلپر کانفرنس کے دوران باضابطہ طور پر متعارف کرایا جائے گا۔
کمپنی کی جانب سے فولڈ ایبل فون کے فیچرز کے بارے میں تو نہیں بتایا گیا مگر اس کے حوالے سے لیکس کافی عرصے سے سامنے آ رہی تھیں۔
لیکس کے مطابق پکسل فولڈ کی باہری اسکرین 5.8 انچ کی ہوگی جبکہ ٹیبلیٹ کی شکل اختیار کرنے پر 7.6 انچ کا ڈسپلے نظر آئے گا۔
فون میں گوگل کے تیار کردہ ٹینسر جی 2 پراسیسر کو استعمال کیا جائے گا۔
ویڈیو میں فون کی اندرونی اسکرین پر کوئی کیمرا نظر نہیں آ رہا جس سے عندیہ ملتا ہے کہ گوگل کے جانب سے کیمرے کو ڈسپلے کے اندر نصب کیا جا سکتا ہے۔

گوگل کی جانب سے یہ فون 2022 میں متعارف کرایا جانا تھا مگر پھر اس منصوبے پر کام روک دیا گیا تھا۔
اس کی قیمت بھی ابھی معلوم نہیں مگر مختلف رپورٹس کے مطابق صارفین کو یہ فولڈ ایبل فون خریدنے کے لیے کم از کم 1700 ڈالرز (4 لاکھ 82 ہزار پاکستانی روپے سے زائد) خرچ کرنا ہوں گے۔
اس سے پہلے بھی کئی کمپنیاں فولڈ ایبل اسمارٹ فونز متعارف کرا چکی ہیں مگر اب پہلی بار گوگل نے اس مارکیٹ میں جگہ بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔

Views= (651)

Join on Whatsapp 1 2

تازہ ترین