اپنی بولڈ ویڈیوز خود بنائی تھیں، انہیں ایک خاتون نے لیک کیا، رابی پیرزادہ کا انکشاف

نازیبا ویڈیوز لیک ہونے کے بعد شوبز چھوڑ کر دینی پروگرامات کرنے والی ماضی کی مقبول گلوکارہ رابی پیرزادہ نے انکشاف کیا ہے کہ لیک ہونے والی ویڈیوز انہوں نے خود شوٹ کی تھیں اور اپنے لیے ہی شوٹ کی تھیں۔
رابی پیرزادہ کی نازیبا ویڈیوز نومبر 2019 میں لیک ہوئی تھیں، جس کے بعد انہوں نے اس وقت وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) سے بھی رجوع کیا تھا۔
ویڈیوز لیک ہونے کے بعد انہوں نے اس وقت ایک انٹرویو میں بتایا تھا کہ ’لیک ہونے والی ذاتی ویڈیوز اور تصاویر ان کے فون میں موجود تھیں لیکن انہوں نے کچھ عرصہ قبل ہی اپنا فون فروخت کیا تھا‘۔
انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ جہاں انہوں نے اپنا اسمارٹ فون فروخت کیا تھا ان کے خلاف بھی انہوں نے کارروائی کی درخواست دے دی۔
ممکنہ طور پر گلوکارہ کے فروخت شدہ فون میں موجود ڈیلیٹ کیا گیا مواد ریکور کرنے کے بعد لیک کردیا گیا تھا۔
تاہم اس وقت یہ قیاس آرائیاں بھی کی گئی تھیں کہ ممکنہ طور پر گلوکارہ کی ویڈیوز ان کے کسی بوائے فرینڈ نے لیک کی ہوں گی۔
ویڈیوز کے لیک ہونے کے تین سال بعد اب انہوں نے انکشاف کیا ہے کہ انہوں نے اپنی مرضی سے اپنے لیے ہی بولڈ ویڈیوز بنائی تھیں، جنہیں ایک خاتون نے لیک کیا۔
رابی پیرزادہ نے انٹرویو میں یہ دعویٰ بھی کیا کہ شوبز کی خواتین اپنی شہرت کے لیے ایسی ویڈیوز بناتی رہتی ہیں اور انہیں بھی اس بات کا علم اپنی ویڈیوز لیک ہونے کے بعد ہوا تھا۔
انہوں نے دعویٰ کیا کہ انہوں نے اپنی مرضی سے اپنے لیے بولڈ ویڈیوز بنائی تھیں، جنہیں ان کے ساتھ رہنے والی ایک خاتون نے لیک کیا تھا۔
انہوں نے ویڈیوز لیک کرنے والی خاتون سے متعلق مزید کوئی تفصیلات نہیں بتائی، تاہم کہا کہ انہیں اس وقت مذکورہ خاتون پر بھروسہ تھا، جس کا انہیں نقصان ہوا۔

Views= (1505)

گروپ جائن کرنے کے لیے کلک کریں (NewsHook) /#/ (NewsHook-2)

تازہ ترین